پہلی تاریخ کا چاند نظر آنے پر پڑھی جانے والی مسنون دعائیں

0
1048

از : مولانا عبدالقادر بن إسماعيل فیضان باقوی ، جامعہ آباد تینگن گنڈی ، بھٹکل ، امام و خطیب جامع مسجد سلیمان بن عشیر بن علی المزروعی ، ابو ظبی ، متحدہ عرب امارات .

الحمد لله ، والصلاة والسلام على رسول الله ومن والاه ،

پہلی تاریخ کا چاند نظر آنے پر مندرجہ ذیل ادعیہ میں سے کوئی بھی دعا پڑھ سکتے ہیں .

نبی کریم صل اللہ علیہ و سلم جب پہلی تاریخ کا چاند دیکھتے تو یہ دعا پڑھتے ، اَللّٰهُ أَكْبَرُ ، اَللّٰهُمَّ أَهِلَّهٗ عَلَيْنَا بِالْأَمْنِ وَالْإِيْمَانِ وَالسَّلَامَةِ وَالْإِسْلَامِ وَالتَّوْفِيْقِ لِمَا تُحِبُّهٗ وَ تَرْضَاهٗ ، رَبُّنَا وَرَبُّكَ اللّٰهُ . ( صحيح ابن حبان ، مسند دارمی )

ابوداؤد کی روایت کردہ حدیث میں آیا ہے کہ آپ صلی اللہ علیہ و سلم ( چاند دکھائی دینے پر ) دو مرتبہ “هِلَالُ خيرٍ وَرُشْدٍ ، اور تین مرتبہ ، اٰمَنْتُ بِالَّذِىْ خَلَقَكَ ، أَلْحَمْدُ لِلّٰهِ الَّذِيْ ذَهَبَ بِشَهْرِ كَذَا ، وَجَاءَ بِشَهْرِ كَذَا ، پڑھا کرتے . یعنی مثلاً اگر شعبان ختم ہوا ہو ، تو اَلْحَمْدُ لِلّٰهِ الَّذِيْ ذَهَبَ بِشَهْرِ شَعًبَانَ ، اور رمضان داخل ہونے پر ، وَجَاءَ بِشَهْرِ رَمَضَانَ ، کہا جائے .

طلحہ بن عبید اللہ رضی اللہ تعالٰی عنہ سے روایت کردہ حدیث میں آیا ہے ، کہ نبی کریم صلی اللہ علیہ و سلم جب چاند دیکھتے تو ، ” اَللّٰهُمَّ أَهِلَّهٗ عَلَيْنَا بِالْأَمْنِ وَالْإِيْمَانِ ، وَالسَّلَامَةِ وَالْإِسْلَامِ ، رَبِّيْ وَرَبُّكَ اللّٰهُ ، هِلَالُ رُشْدٍ وَخَيْرٍ ” پڑھا کرتے تھے . ( ترمذی نے اس حدیث کو روایت کر کے حسن صحیح کہا ہے )

مذکورہ دعاؤں میں سے کسی بھی دعا کو پڑھنے سے سنت حاصل ہوگی .

--Advertisement--

اظہارخیال کریں

Please enter your comment!
Please enter your name here